روس نے عالمی ادایئگی اور وصولی کے لیئے کرپٹو کرنسی پر انحصار کر لیا,بِٹ کوئین کی قیمت80ہزار تک پہنچنے اور مارکیٹ کیپ میں کئی ٹریلیئن کا اضافہ متوقہ

روس نے عالمی ادایئگی اور وصولی کے لیئے کرپٹو کرنسی پر انحصار کر لیا,بِٹ کوئین کی قیمت80ہزار تک پہنچنے اور مارکیٹ کیپ میں کئی ٹریلیئن کا اضافہ متوقع

منگل 08مارچ2022
کراچی ، فریئر روڈ (123karachi.com )
تحریر : توصیف حنیف
اقوام متحدہ اور یورپی یونین کی جانب سے روس پر سخت اقتصادی پابندیاں عائد کرنے سے روس کو عالمی تنہائی کا شکار کر دیا گیا ہے۔ visa،MasterCard اور Paypal نے روسی شہریوں کو اپنی سہولیات استعمال کرنے سے منع کر دیا ہے ۔ جس کے باعث روس عالمی سطح پر ادائگیاں کرنے سے قاصر ہو گیا ہے۔ دوسری جانب روس کے تیل کی فروخت پر بھی عالمی سطح پر پابندی لگا دی گئی ہے اگر یہ سلسلہ جاری رہا توروس عنقریب دیوالیہ ہو سکتا ہے۔ روسی کرنسی روبل بھی انتہائی غیر مستحکم ہو گئی ہے ، جبکہ یوکرین کو عالمی طور پر بھرپور حربی و مالی وسائل فراہم کیئے جا رہے ہیں ۔ ماہرین کے مطابق اب روس کے پاس صرف ایک راستہ بچا ہے کہ وہ عالمی ادائیگیاں اور وصولیاں کرپٹو کرنسی کے ذریعے کر سکتا ہے ۔روس کی جانب سے کرپٹو کرنسی میں بھاری خرید و فروخت کا عمل جاری ہو گیا ہے ، مارکیٹ کیپ میں کئی ٹریلیئن اضافے کی توقع کی جا رہی ہے ۔آنے والے دنوں میں بِٹ کوئین کی طلب میں اضافے کی وجہ سے اس کی قیمت80ہزار ڈالر سے تجاوز کر سکتی ہے ۔واضح رہے کہ امریکہ اور اتحادیوں نے روس پر کرپٹو کرنسی کی تجارت پر بھی پابندی لگانے کی کوشش کی جو کہ ناکام ہو گئی کیونکہ کرپٹو کرنسی کی تجارت کسی حکومت کی پابند نہیں ہے۔

روس نے عالمی ادایئگی اور وصولی کے لیئے کرپٹو کرنسی پر انحصار کر لیا,بِٹ کوئین کی قیمت80ہزار تک پہنچنے اور مارکیٹ کیپ میں کئی ٹریلیئن کا اضافہ متوقہ
روس نے عالمی ادایئگی اور وصولی کے لیئے کرپٹو کرنسی پر انحصار کر لیا,بِٹ کوئین کی قیمت80ہزار تک پہنچنے اور مارکیٹ کیپ میں کئی ٹریلیئن کا اضافہ متوقہ

اپنا تبصرہ بھیجیں