ڈی جی SBCAشمس الدین سومرو کٹھ پتلی،SBCAکے اختیارات کلفٹن ، طارق روڈ، اور نارتھ ناظم آباد کی نجی ٹھیکیدارشخصیات کو منتقل.لیاقت آباد بیچ کر مافیا کھا گئی

ڈی جی SBCAشمس الدین سومرو کٹھ پتلی،SBCAکے اختیارات کلفٹن ، طارق روڈ، اور نارتھ ناظم آباد کی نجی ٹھیکیدارشخصیات کو منتقل.لیاقت آباد بیچ کر مافیا کھا گئی

123karachi.com
دورانیہ مطالعہ: 03منٹ
پیر یکم فروری2021
کراچی ،فریئر روڈ
SBCA لیاقت آباد ٹاﺅن کے افسران اور چار رکنی معطل افسران نے لیاقت آباد میں لوٹ سیل لگا دی،لیاقت آباد کے تقریباً ہر بلڈر نے ان افسران سے پیکج ڈیل کر کے 7منزلہ ناقص و غیر قانونی تعمیرات کی با حفاظت تکمیل کی گارنٹی حاصل کر لی۔ ڈائریکٹر لیاقت آباد عبدالرحمن بھٹی، ADرضی بلگرامی نے معطل افسران BIاورنگزیب علی خان ، BIضیاءالرحمن اور BIزبیر مرتضیٰ کو اپنا فرنٹ مین بنا کر لیاقت آباد میں ہر قسم کی غیر قانونی تعمیرات کے پیکج حاصل کرنے کی ذمہ داری ان پر لگا دی ۔ معطل ADاویس اور کاشف للوّ کی ذمہ داری ناظم آباد کے تمام علاقوں سے پیکج ڈیل کرنے کی لگائی گئی ہے۔ جبکہ لیاقت آباد کے علاقوں سے BIزبیر مرتضیٰ، معطل BIضیاءالرحمن اور SBIقمر قائم خانی کو پیکج ڈیل کرنے کی ذمہ داری دی گئی ہے۔ DGشمس الدین سومرو، ڈائریکٹر ویجلینس اور ڈائریکٹر اسٹرکچر مخصوص مفادات کی وجہ سے خاموشی اختیار کیئے ہوئے ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ ADاویس،BIضیاءالرحمن،BIزبیر مرتضیٰ،SBIقمر احمد قائم خانی اور ناظم آباد کا پرائیوٹ شخص کاشف للّو کو لیاقت آباد سے کروڑوں روپے کا بھتہ اکھٹّا کرنے کی ذمہ داری ڈی جی سے بھی اعلیٰ سطح کے عناصر نے دی ہوئی ہے اور ڈی جی بھی صرف خانہ پوری کے اختیارات رکھتے ہیں۔
لیاقت آباد بی ایریا میں پلاٹ نمبروں 11/6، 9/26A،بی ایریا پر بھی مسلسل نشاندہی کے باوجود ڈی جی غیر قانونی تعمیرات کے خلاف کسی قسم کی کاروائی سے مجبور نظر آتے ہیں۔پلاٹ نمبر683 /10پر بھی غیر قانونی 7منزلہ عمارت بلڈر یعقوب انصاری نے مکمل کرلی ہے، واضح رہے کہ مذکورہ غیر قانونی عمارت کی انہدامی کاروائی سابقہ ڈی جی اشکار داور نے خود موقع پر پہنچ کے کروائی تھی.
شریف آباد میں پلاٹ نمبروںR-670،R747پر بھی غیر قانونی دوکانیں اور اضافی فلور ڈال دئے گئے ہیں جبکہ ڈی جی اس پر بھی کاروائی سے قاصر ہیں ڈی جی نے 123karachi.com کو بتایا کہ انہوں نے 123karachi.com کی نشاندہی پر مذکورہ غیر قانونی عمارتوں کی انہدامی کاروائیوں کی ہدایت جاری کردی ہے۔ مگر ان ہدایات کا کیا فائدہ جب ڈی جی کی کوئی سنتا ہی نہیں۔لیاقت آباد میں پرائیوٹ اشخاص شکیل مکرانی ،عرفان چڈی،لپاڑو اور راشد چوڑی سمیت دیگر افراد بلڈروں کی SBCAافسران سے ڈیل کرانے میں مصروف ہیں.

ڈائریکٹر لیاقت آباد ٹاﺅن عبدالرحمن بھٹی بھی غیر قانونی عمارتوں کی سر پرستی میں مگن،بی ایریا پلاٹ نمبر 9/26A پر غیر قانونی و ناقص G+5عمارت تعمیر
ڈائریکٹر لیاقت آباد ٹاﺅن عبدالرحمن بھٹی بھی غیر قانونی عمارتوں کی سر پرستی میں مگن،بی ایریا پلاٹ نمبر 9/26A پر غیر قانونی و ناقص G+5عمارت تعمیر

اپنا تبصرہ بھیجیں