ایڈیشنل سیشن کورٹ سینٹرلIIIمیں7ماہ سے جج کی عدم تقرری کے باعث ہزاروں سائلین رل گئے

ایڈیشنل سیشن کورٹ سینٹرلIIIمیں7ماہ سے جج کی عدم تقرری کے باعث ہزاروں سائلین رل گئے
جمعہ 06نومبر2020
ضلع وسطی ٰکی ایڈیشنل سیشنIII عدالت میں گذشتہ 7ماہ سے جج کی تقرری نہ ہونے کے باعث ہزاروں سائلین اور مقدمات سے منسلک افراد رل گئے۔ تفصیلات کے مطابق ایڈیشنل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج III ڈسٹرکٹ سینٹرل میں 7ماہ قبل جسٹس عظمت اللہ خان لودھی کی تقرری تھی، مگر ان کی ریٹائرمنٹ کے بعد مذکورہ عدالت میں کسی بھی جج کی تقرری تا حال نہیں کی گئی ،جس کے باعث ضلع وسطیٰ کے ہزاروں سائلین انصاف کے حصول میں ناکام ہو رہے ہیں۔عدالتی عملہ سائلین کو مہینے میں 2بار تاریخیں دے کر پیشیوں پر بلاتا رہتا ہے۔ مگر عدالت میں جج کی تقررری نہ ہونے کے باعث سائلین تو پیشیوں پر باقائدگی سے صبح ہی صبح پیش ہو جاتے ہیںمگر ان کے مقدمات جج نہ ہونے کے باعث کسی بھی قسم کی پیش رفت سے محروم رہتے ہیں۔ سائلین اپنے روز مرہ کے سارے کام چھوڑ کر صبح 8:00ےا 8:30پر کورٹ پہنچ جاتے ہیں مگر عدالت میں جج نہ ہونے کے باعث عدالتی عملہ ان کو اگلی پیشی کی تاریخ دے دیتے ہیں۔سن رائز کو ایک سائل نے بتایاکہ اگر عدالت میں 8:30کے بعد اگر کوئی سائل پہنچتا ہے تو ماتحت انتظامی عدالتی عملہ سائلین سے جرمانہ بھی وصول کرتا ہے اور ہر پیشی پر سائلین سے وکلاءحضرات بھی اپنی رقومات وصول کرتے ہیں۔سائلین نے اپیل کی ہے کہ مذکورہ عدالت میں مقدمات کی شنوائی کے لئیے جلد از جلد جج کا تقرر کیا جائے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں