لیاقت آباد ٹاؤن: کاشف للّو، ضیاءالرحمن اور اویس بلڈروں کے لئیے وبال بن گئے، فی سائٹ 3 لاکھ اضافی رشوت کی وصولی مہم جاری

لیاقت آباد ٹاؤن: کاشف للّو، ضیاءالرحمن اور اویس بلڈروں کے لئیے وبال بن گئے، فی سائٹ 3 لاکھ اضافی رشوت کی وصولی مہم جاری

123karachi.com
دورانیہ مطالعہ: 02منٹ
جمعہ 15جنوری 2021
کراچی ، فریئر روڈ
SBCA میں کام کرنے والے سسٹم نے لیاقت آباد میں ہونے والی غیر قانونی تعمیرات سے حاصل ہونے والے کروڑوں روپے کے بھتے کو مینیج کرنے کے لیئے کاشف للّو، ضیاءالرحمن اور اویس پر مشتمل 3 رکنی شرفا کمیٹی بنا دی ہے۔ علاقے سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق ضیاءالرحمن جو کہ SBCAسے برطرف شدہ افسر ہیں نےگذشتہ دنوں لیاقت آباد کے بلڈروں سے رابطے و ملاقاتیں کر کے انہیں باور کرایا ہے کہ اگر وہ اپنی غیر قانونی تعمیرات کو ڈیمولیشن سے بچانا چاہتے ہیں تو فی عمارت 3لاکھ روپے اضافی ادا کریں۔واضح رہے کہ ہر غیر قانونی عمارت کا بلڈر پہلے ہی فی عمارت 8تا 12لاکھ روپے کا پیکیج SBCAاور متعلقہ افراد کو دے چکا ہے۔
واضح رہے کہ ضیاء نے 14جنوری 2021 کو شکیل مکرانی کی زیر نگرانی پلاٹ نمبر671بلاک 10پر جعلی انہیدامی کاروائی کر کے مخصوص مالی مفادات حاصل کر لیئے ہیں.جبکہ بقیہ بلڈروں کو تنبیہ کی گئی ہے کہ وہ فوری طور پر فی عمارت 3 لاکھ روپے جمع کروادیں، بصورت دیگر انہدامی کاروائی کے لیئے تیار ہو جائیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں