غیر مقامی ٹرانسپورٹ مافیا کا کراچی کی خاتون پر تشدد، پولیس روائتی بے حسی کا شکار

غیر مقامی ٹرانسپورٹ مافیا کا کراچی کی خاتون پر تشدد، کراچی پولیس بے حسی کا شکار،DIGٹریفک جاوید مہر خاموش

123karachi.com
کراچی ،فریئر روڈ
2دسمبر2020
کراچی میں ایک اور غیر مقامی بس ڈرایئور نے کراچی کی خاتون کو تشدد کا نشانہ بنا دیا،مگر پولیس نے کوئی کاروائی نہیں کی۔تفصیلات کے مطابق اردو بازار کے علاقے میں مقامی دفتر میں ملازم خاتون دفتر سے گھر جانے کےلیئے 4Lکی بس ،نمبر پلیٹ (JB8386)میں برنس روڈ سے سوار ہوئی۔ مذکورہ خاتون نے 123karachi.comکو بتایا کہ ڈرایئور یا تو نشے میں تھا یا نا معلوم وجوہات کے تحت اس نے انہیں زور سے ہاتھ مارا جس پر خاتون کو شدید درد محسوس ہوا۔ خاتون نے جب ڈرایئور سے دریافت کیا کہ اس نے ایسا کیوں کیا تو ڈرایئور نے الٹا بدتمیزی شروع کردی۔ جبکہ خاتون اس چوٹ کی وجہ سے اگلے دن تک بھی درد محسوس کرتی رہی۔
123karachi.com نے ایڈیشنل آئی جی کراچی غلام نبی میمن اور DGٹریفک جاوید مہر سے مذکورہ حوالے سے بات کی مگر تا حال اس ضمن میں ڈرایئور کے خلاف کسی قسم کی کاروائی عمل میں نہیں لائی گئی۔ڈرایئور کی تصویر بھی منسلک ہے۔ ‎

غیر مقامی ٹرانسپورٹ مافیا کا کراچی کی خاتون پر تشدد، پولیس روائتی بے حسی کا شکار
غیر مقامی ٹرانسپورٹ مافیا کا کراچی کی خاتون پر تشدد، پولیس روائتی بے حسی کا شکار

اپنا تبصرہ بھیجیں